وزیراعلی خیبر پختونخواہ کی اپنی وزارت ملازمین کی کمی کا شکار

Share on facebook
Share on twitter
Share on linkedin
Share on whatsapp
Share on email

پشاور… وزیراعلی خیبرپختونخواہ سپورٹس ڈیپارٹمنٹ خیبر پختونخواہ میں ملازمین کی کمی کو پورا نہ کرسکے اور نہ ہی تین سال گزرنے کے باوجود ابھی تک ریجنل سپورٹس آفیسرز کیلئے کوئی سٹرکچر بنایا جاسکا ہے اٹھارہ گریڈ میں ہونے کے باوجود ابھی تک متعلقہ اہلکار صرف تنخواہیں وصول کررہے ہیں جبکہ زیراعلی خیبر پختونخواہ کے پاس اضافی چارج ہونے کے باوجود انہوں نے بھی اس معاملے پر مکمل طور پر آنکھیں بند کر رکھی ہیں جس کی وجہ سے وزارت سپورٹس میں اصلاحات نہیں ہوسکی اور اسی بناء پر اس وقت ریجنل سپورٹس آفیسرز کو ابھی ڈی ایس اوز کے اضافی عہدے دئیے جارہے ہیں اور نئی تبادلوں کی فہرست میں ٹیکنیکل عہدوں پر بھی من پسند افراد کو تعینات کیا جارہا ہے جبکہ دیگر ڈیپارٹمنٹ سے آنیوالے تمام اہلکاروں کو واپس بھجوانے کے بعد ابھی سپورٹس ڈائریکٹریٹ خیبر پختونخواہ ڈیپارٹمنٹس میں موجود کمپیوٹر آپریٹرز کونئے بھرتی تک ڈی ایس اوز کے عہدوں پر عارضی طور پر لگانے کی کوششیں کی جارہیں. واضح رہے کہ اس وقت سپورٹس ڈائریکٹریٹ کے زیر انتظام کھیلوں کے ایک ہزار سہولیات کا پراجیکٹ بھی چل رہا ہے جہاں پر وفاق کے زیر انتظام ادارے این بی ایف کے افسر کو ڈیپوٹیشن پر تعینات کیا گیا ہے.