وزیراعلی کے احکامات نے سپورٹس ڈائریکٹریٹ کو نئے بحران سے دو چار کردیا

Share on facebook
Share on twitter
Share on linkedin
Share on whatsapp
Share on email

پشاور… سپورٹس ڈائریکٹریٹ خیبر پختونخواہ کو وزیراعلی خیبر پختونخواہ کی جانب سے حال ہی میں جاری ہونیوالے احکامات کے بعد ایک نئے بحران کا سامنا ہے جس میں وزیراعلی خیبر پختونخواہ نے ایلمنٹری ایجوکیشن سے آنیوالے سپورٹس افسران جو کہ مختلف اضلاع میں کھیلوں کی سرگرمیوں کیلئے کام کررہے ہیں کو ایک ہفتے میں واپس بھیجنے کے احکامات جاری کئے ہیں ان احکامات کی روشنی میں کم و بیش چودہ کے قریب اہلکار جو مختلف پوزیشن پر سپورٹس ڈائریکٹریٹ اور ضم اضلاع کے سپورٹس ڈیپارٹمنٹ سمیت پراجیکٹ کے مختلف منصوبوں میں کام کررہے ہیں کو واپس بھجوا دیا جائیگا جس کے باعث سپورٹس ڈائریکٹریٹ میں روزمرہ کے کام ٹھپ ہو کررہ گئے ہیں کیونکہ اس وقت ملاکنڈ سمیت جنوبی اضلاع میں بھی بعض اہم پوسٹوں پر ایلمنٹری ایجوکیشن سے آنیوالے اہلکارکھیلوں کی سرگرمیوں جاری رکھے ہوئے ہیں ان اہلکاروں کی فوری واپسی کے عمل سے جہاں سپورٹس ڈائریکٹریٹ کی سرگرمیاں متاثر ہونے کا خدشہ ہے وہیں پر اگلے ہفتے ہونیوالے انڈر 21 کے کھیلوں سمیت دیگر کھیلوں کی سرگرمیاں بھی متاثر ہونگی کیونکہ سپورٹس ڈائریکٹریٹ نے خالی آسامیوں کے بارے میں صوبائی حکومت کو آگاہ تو کیا ہے مگر ابھی تک اس پربھرتی کا عمل بھی نہیں کیا گیا جس کی وجہ سے واپس جانیوالے اہلکاروں کی خالی آسامیاں سپورٹس ڈائریکٹریٹ کو ایک نئے بحران سے دو چار کریگی.واضح رہے کہ وزیراعلی خیبر پختونخواہ اس وزارت کے اضافی چارج لیکر کام کررہے ہیں.